- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -

مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز کا ظلم و ستم تمام حدیں پار

141

- Advertisement -

سوپور: (اوصاف ٹی وی) مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز کا ظلم و ستم تمام حدیں پار کر گیا۔ معصوم نواسے کی آنکھوں کے سامنے بزرگ نانا کو گاڑی سے اتار کر گولی مار کر شہید کر دیا۔ 3 سالہ بچے کی لاش کے پاس رونے کی تصویر نے سب کو رلا دیا۔

- Advertisement -

ضلع بارہ مولا کے شہر سوپور کے علاقے ماڈل ٹاؤن میں بھارتی فوج نے سفاکیت کی حد کر دی۔ خون میں لت پت نانا کی لاش کے قریب روتے معصوم ایاد کو کون بتائے کہ اسے گود میں اٹھا کر پیار کرنے والا اس کا نانا بشیر احمد بھارتی بربریت کی بھینٹ چڑھ چکا ہے۔

شہید بشیر کی موت کی خبر اہل خانہ پر بجلی بن کر گری۔ شہید بشیر کے بیٹے نے بتایا کہ اس کے والد کو گاڑی سے اتار کر بھارتی فوجیوں نے گولی ماری۔ بھارتی فوجیوں نے لاش کی بے حرمتی بھی کی۔ بزرگ کشمیری کی لاش اور معصوم ایاد کی سسکیاں دنیا کے منصفوں سے مجسم سوال ہیں۔

بھارتی فوجیوں کی سفاکیت کے بعد ٹوئٹر پر سوپور ٹرینڈ کرنے لگا، لوگ بھارتی بربریت کی مذمت کر رہے ہیں۔

دوسری جانب قابض فوج نے 2 نوجوانوں کو ضلع راجوڑی کے علاقے کیری میں سرچ آپریشن کی آڑ میں شہید کر دیا، علاقے میں انٹرنیٹ اور موبائل سروس بند کر کے گھر گھر تلاشی بھی لی گئی۔ ظالمانہ کارروائی کے خلاف کشمیریوں نے احتجاج کیا۔ تین روز کے دوران شہدا کی تعداد 7 ہوگئی۔

کشمیر میڈیا سروس نے جون میں ہونیوالے بھارتی سفاکیت کی رپورٹ جاری کر دی۔ رپورٹ کے مطابق گذشتہ مہینے میں 54 کشمیریوں کو شہید کیا گیا، شہدا میں دو بچے بھی شامل تھے۔ 82 افراد کو گرفتار کیا گیا، 29 کشمیری بھارتی فوج کی گولیوں سے زخمی بھی ہوئے، دو خواتین بیوہ ہوئیں، 5 بچے یتیم ہوئے اور کشمیریوں کے 25 گھروں کو تباہ بھی کیا گیا۔

- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

urUrdu
en_GBEnglish urUrdu