- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -

بھارت میں کسانوں کا متنازعہ قوانین کے خلاف احتجاج

کاشتکاروں نے جگہ جگہ پنچائتیں منعقد کیں۔

67

- Advertisement -

نئی دہلی: (اوصاف ٹی وی) بھارت میں کسانوں کا متنازعہ قوانین کے خلاف احتجاج جاری ہے۔

کاشتکاروں نے جگہ جگہ پنچائتیں منعقد کیں۔

راجستھان کے جلسے میں ہزاروں افراد نے شرکت کی۔

- Advertisement -

بھارتی کسانوں کا کالے قوانین کے خلاف احتجاج جاری۔

- Advertisement -

کسان رہنما راکیش ٹیکیٹ نے کہا کہ اپنے اپنے گاؤں کی مٹی دلی ساتھ لے کر آنا ،لڑائی لمبی چلے گی۔

انہوں نے مزید کہا کہ دلی پولیس ان پر لاٹھیاں چلاتی رہی۔

مظاہرین انہیں کھانا کھلاتے رہے۔

کاشتکاروں کا کہنا تھا کہ اگر کالے قوانین کو واپس نہ کروایا تو پورے بھارت میں زراعت ختم ہو جائے گی۔

احتجاج میں مسلم کسانوں نے بھی شرکت کی۔

تین متنازع زرعی قوانین کے خلاف بھارتی کسان 26 نومبر سے دلی کے اردگرد دھرنا دیئے بیٹھے ہیں۔

مودی کی سیاسی چالوں کے سبب کاشتکاروں سے مذاکرات کے کئی دور ناکام ہو چکے ہیں۔

- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

urUrdu