قرضوں پر ریلیف دینے کا فیصلہ کیا ہے: شاہ محمود قریشی

15

اسلام آباد:(اوصاف ٹی وی) وزیرِ خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ وزیرِ اعظم عمران خان نے ترقی پذیر ملکوں کے لیے قرضوں میں سہولت کی اپیل کی تھی، جی ٹوئنٹی نے پاکستان سمیت 76 ملکوں کو قرضوں پر ریلیف دینے کا فیصلہ۔

دفترِ خارجہ اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیرِ خارجہ شاہ محمود قریشی نے بتایا کہ فیصلے کے تحت آئی ایم ایف اور ورلڈ بینک سمیت تمام مالیاتی ادارے ریلیف دیں گے۔

وزیرِ خارجہ نے کہا کہ کورونا وائرس سے دنیا بھرمیں ایک لاکھ 30 ہزار اموات ہو چکی ہیں، اس کی وجہ سے ترقی یافتہ ممالک میں بھی بے روزگاری بڑھ رہی ہے، برآمدات بھی کم ہوگئی ہیں، وزیرِ اعظم نے کہا کہ ترقی پذیر ممالک زیادہ متاثر ہو رہے ہیں۔

وزیرِ اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ ہم نے 8 ارب ڈالرز کا ریلیف پیکیج دیا، یہ نہیں ہوسکتا کہ کورونا وائرس سے چین متاثر ہو اور امریکا متاثر نہ ہو، یہ بھی ہو نہیں سکتا کہ یورپ متاثر ہو اور پاکستان متاثر نہ ہو۔

وزیرِ خارجہ نے کہا کہ وزیرِ اعظم عمران خان نے اپیل کی کہ جہاں ترقی یافتہ ممالک متاثر ہیں غریب ممالک کا کیا حال ہوگا، ترقی یافتہ ممالک کی جہاں آمدن گر رہی ہے وہیں اخراجات بڑھ رہے ہیں، ترقی پذیر ممالک کی مدد قرضوں سے ممکن ہے۔

انہوں نے بتایا کہ جی 7 کے اجلاس میں ہماری قرض معافی کی تجویز زیرِ بحث آئی، جی 7 نے کہا ہے کہ ہم تب آگے بڑھ سکتے ہیں، جب جی 20 غور کرے، جی 20 نے 76 ممالک کو قرضوں میں ریلیف کا فیصلہ کیا ہے۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ قرضوں میں ریلیف کے فیصلے پر یکم مئی سے عمل درآمد ہو جائے گا، جی 20 کے فیصلے سے پاکستان کو مالیاتی گنجائش ملے گی۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.